news
English

آسٹریلوی بلے باز ڈیوڈ وارنر کی گمشدہ ’گرین کیپ‘ مل گئی

ڈیوڈ وارنر کی اپنے آخری ٹیسٹ کے لیے اپنی گمشدہ بیگی گرین کیپ کی واپسی کی پرجوش اپیل کامیاب رہی اور انہیں ان کی یادگار ٹیسٹ کیپ واپس مل گئی۔

آسٹریلوی بلے باز ڈیوڈ وارنر کی گمشدہ ’گرین کیپ‘ مل گئی

پاکستان اور آسٹریلیا کے درمیان جاری آخری ٹیسٹ سیریز کھیلنے والے بلے باز ڈیوڈ وارنر کی کھوئی ہوئی ’گرین کیپ‘ واپس مل گئی۔ 
آخری ٹیسٹ سیریز کھیلنے والے آسٹریلوی بلے باز ڈیوڈ وارنر کی گمشدہ بیگی گرین کیپ مل گئی ہے، وارنر نے اپنے سوشل میڈیا اکائونٹ پر ویڈیو شئیر کرتے ہوئے اس سلسلے میں مدد کرنے والوں کا شکریہ ادا کیا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق آسٹریلوی اوپنر ڈیوڈ وارنرکی اپنے آخری ٹیسٹ کے لیے اپنی گمشدہ بیگی گرین کیپ کی واپسی کی پرجوش اپیل کامیاب رہی اور انہیں ان کی ٹیسٹ کیپ واپس مل گئی ہے۔ 
پاکستان کے خلاف دوسرے ٹیسٹ کے بعد میلبورن سے وارنر کے آبائی شہر سڈنی جاتے ہوئے ان کا بیگ لاپتہ ہو گیا تھا جس کے باعث 37 سالہ کھلاڑی کو بدھ کو تیسرے ٹیسٹ کے پہلے دن میدان میں متبادل کیپ پہننی پڑی تھی۔ 
وارنر نے جمعہ کے روز انسٹاگرام پر ایک پوسٹ میں کہا کہ "میں بہت خوشی اور راحت محسوس کر رہا ہوں کہ میں نے اپنا بیگ واپس اپنے ہاتھوں میں لے لیا ہے۔"

ان کا کہنا تھا کہ “کوئی بھی کرکٹر جانتا ہے کہ اس کے لیے ٹیسٹ کیپ کتنی خاص ہے اور میں اسے ساری زندگی یاد رکھوں گا۔،،
"میں ان تمام لوگوں کا بہت ممنون ہوں جو اسے تلاش کرنے میں شامل رہے ہیں، یہ میرے کندھوں سے ہٹنے والا ایک بوجھ ہے جو پچھلے دو دنوں میں میرے کندھوں پر سوار رہا ہے۔" 
ڈیوڈ وارنر نے جمعرات کو آسٹریلیا کی پہلی اننگز میں 34 رنز بنائے تھے اور وہ اپنی آخری ٹیسٹ سیریز کو یادگار بنانے میں ناکام رہے۔
اس سے قبل 
2 جنوری کو تجربہ کار آسٹریلوی اوپننگ بلے باز نے ایک ویڈیو جاری کرتےہوئے کہا تھا کہ ان کی گرین کیپ سڈنی میں چوری ہوگئی ہے۔ 
سوشل میڈیا پر جاری ویڈیو میں ڈیوڈ وارنر نے کہا تھا کہ میرا بیگ چوری ہو گیا ہے جس میں میری بیٹیوں کے لیے تحائف اور میری ٹیسٹ کیپ تھی، جس کے پاس بھی میرا بیگ ہے، وہ میری کیپ لوٹا دیں، چاہیں تو بیگ اپنے پاس رکھ لیں۔،،
واضح رہے کہ بیگی گرین کیپ ٹیسٹ کرکٹ کھیلنے والے تمام آسٹریلوی کھلاڑی پہنتے ہیں اور اسے ایک خاص مقام حاصل ہے۔ 
اس ویڈیو کے تین روز بعد ایک اور ویڈیو جاری کرتے ہوئے ڈیوڈ وارنر نے مداحوں کو بتایا کہ ان کی کھوئی ہوئی پی کیپ انہیں واپس مل گئی ہے۔ 
بلے باز کا کہنا تھا کہ بیگی کیپ واپس ملنے پر وہ بہت خوشی اور اطمینان محسوس کررہے ہیں۔ انہوں نے ان تمام لوگوں کا شکریہ ادا کیا جنہوں نے ان کی کیپ ڈھونڈنے میں ان کی مدد کی، تاہم انہوں نے یہ واضح نہیں کیا کہ ان کی بیگی گرین کیپ کہاں اور کیسے واپس ملی۔